ایف آئی اے کو دعا زہرہ کی بیرون ملک منتقلی کی کسی بھی کوشش کے خلاف اقدامات کرنے کا حکم

سپریم کورٹ سندھ نے گزشتہ سماعت کے دوران دعا زہرہ کی بازیابی میں تاخیر پر قائم مقام آئی جی سندھ کو شوکاز نوٹس جاری کرتے ہوئے انہیں آج کی سماعت کے دوران پیش کرنے کی ہدایت کی تھی۔

تاہم، پولیس اسے آج پیش نہیں کر سکی، جس پر عدالت نے ڈی جی ایف آئی اے کو سرحدی علاقوں کی نگرانی کرنے کی ہدایت جاری کی تاکہ لڑکی کو بیرون ملک منتقل کرنے کی کسی بھی کوشش سے بچا جا سکے۔

سندھ ہائی کورٹ نے نادرا اور اسٹیٹ بینک آف پاکستان (ایس بی پی) کو نامزد ملزمان کے بینک اکاؤنٹس اور قومی شناختی کارڈز (این آئی سی) منجمد کرنے کی بھی ہدایت کی۔

عدالت نے قائم مقام آئی جی کامران فضل کو غلام نبی میمن کی جگہ تعینات کرنے پر شوکاز نوٹس واپس لے لیا اور پولیس کو ہدایت کی کہ لڑکی کو 10 جون کو آئندہ سماعت پر پیش کیا جائے۔
سماعت کے دوران عدالت نے زہرہ کو عدالت میں پیش نہ کرنے پر پولیس پر برہمی کا اظہار کیا۔ “دعا زہرہ کہاں ہیں اور انہیں عدالت میں کیوں پیش نہیں کیا گیا؟” جج طارق سلیم شیخ نے استفسار کیا۔ عدالت نے متعلقہ حکام کو حکم دیا کہ زہرہ کو بازیاب کر کے ایک ہفتے کے اندر لاہور ہائیکورٹ میں پیش کیا جائے۔

Share

Leave a Reply

Your email address will not be published.